نواز شریف کے کسی نمائندے نے آرمی چیف سے ملاقات نہیں کی، مریم نواز

اسلام آباد: مسلم لیگ ن کی مرکزی نائب صدر مریم نواز نے کہا ہے کہ نواز شریف کے کسی نمائندے نے آرمی چیف سے ملاقات نہیں کی۔

اسلام ہائیکورٹ میں پیشی کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ عسکری قیادت کی جانب سے گلگت بلتستان کے مسائل پر بلایا گیا تھا لیکن یہ معاملہ سیاسی ہے اسے پارلیمنٹ میں طے ہونا چاہیے۔

صحافی کی جانب سے مریم نواز سے پوچھا گیا کہ کیا عسکری قیادت کے ساتھ ڈنر نواز شریف کی اجازت سے ہوا ؟ مریم نواز نے جواب دیا کہ ڈنر ہوا یا نہیں اس کا علم نہیں، میں نے بھی سننا ہے۔

انہوں نے کہا کہ سیاسی معاملات سیاسی قیادت کو ہی حل کرنے دیں اور سیاسی قیادت کو بھی عسکری قیادت کے پاس نہیں جانا چاہیے تھا۔ سیاسی معاملات پر پارلیمنٹ میں ہی بحث کرنی چاہیے۔

گزشتہ رات ایک ٹی وی شو میں مسلم لیگ (ن) کے رہنما احسن اقبال نے کہا تھا کہ آرمی چیف سے ملاقات میں کوئی حرج نہیں، پوری دنیا میں ایسا ہوتا ہے۔

مریم نواز کی گفتگو کا ایک حصہ مسلم لیگ (ن) کے آفیشل ٹویٹر اکاؤنٹ سے ٹویٹ کیا گیا اور اسے مریم نواز نے ری ٹویٹ کیا تو نیچے تبصروں کا ڈھیر لگ گیا۔

کچھ ٹویٹر صارفین نے ان کی بات کو سراہا تو کئی افراد نے اس پر تنقید کی اور اسے غلط بیانی قرار دیا۔

شیخ رشید کا ردعمل

وزیرریلوے شیخ رشید احمد نے مریم نواز کی بات پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ آرمی چیف سے سیاستدانوں کی ایک نہیں بلکہ دو ملاقاتیں ہوئی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ حالیہ ملاقات میں ساڑھے تین گھنٹے تک سیاست پر گفتگو ہوئی جبکہ اس سے قبل جو ملاقات ہوئی تھی وہ 5 گھنٹے پر محیط تھی۔

شیخ رشید نے کہا کہ میں پہلے کہہ چکا ہوں کہ دسمبر جنوری میں ن لیگ سے ش لیگ نکلے گی۔

انہوں نے کہا کہ ان پارٹیوں کا ایجنڈا صرف مارچ میں ہونے والے سینیٹ انتخابات کو روکنا ہے کیونکہ ان میں پاکستان تحریک انصاف کو ایوان بالا میں بھی اکثریت حاصل ہو جائے گی۔

ٹیگ

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

We are working hard for keeping this site online and only showing these promotions to get some earning. Please turn off adBlocker to continue visiting this site