سپریم کورٹ : شہبازشریف کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کی درخواست خارج

سپریم کورٹ نے سابق وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کی نیب کی درخواست خارج کر دی ہے۔

جسٹس مشیر عالم کی سربراہی میں قائم دو رکنی بینچ نے کیس کی سماعت کی۔

نیب نے شہباز شریف کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کے لیے درخواست دائر کی تھی، نیب کی جانب سے ڈپٹی پراسیکوٹر جنرل جہانزیب بھروانہ عدالت میں پیش ہوئے۔

دوران سماعت جسٹس منیب اختر نے کہا کہ جب یہ درخواست دائر کی گئی تھی اس وقت صورتحال مختلف تھی، نیب جس کا نام ای سی ایل میں ڈالنا چاہتا ہے وہ ملک کی نامور شخصیت ہے۔

نیب کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ اکثر ملزمان ای سی ایل مین نام نہ ہونے کی وجہ سے فرار ہو جاتے ہیں، انکوائری کے مراحل میں مختلف مقدمات کے 6 ملزمان ملک سے بهاگ چکے ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ ملزم اس وقت عدالتی تحویل میں ہے، ملزم شہباز شریف پر آمدنی سے زائد اثاثے بنانے کا الزام ہے، ملزم منی لانڈرنگ میں بھی ملوث ہے۔

جسٹس منیب اختر نے نیب وکیل سے استفسار کیا کہ آپ فیصلہ پڑھ کر کیوں نہیں آتے؟ منی لاںڈرنگ سے متعلق 4 دن پہلے 10 رکنی فل کورٹ کا فیصلہ آیا ہے۔

بعد ازاں عدالت نے نیب کی درخواست خارج کر دی۔

ٹیگ

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

We are working hard for keeping this site online and only showing these promotions to get some earning. Please turn off adBlocker to continue visiting this site
سپریم کورٹ : شہبازشریف کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کی درخواست خارج is highly popular post having 1 Twitter shares
Share with your friends
Powered by ESSB