سعودی عرب کو 2 ارب ڈالر قرض کی واپسی، چین ایک بار پھر مدد کو آ گیا

چین نے پاکستان کو ڈیڑھ ارب ڈالر دینے پر اتفاق کر لیا ہے تاکہ حکومت سعودی عرب سے لیا گیا 2 ارب ڈالرز واپس لوٹا سکے۔

اسٹیٹ بینک اور وزارت خزانہ کے ذرائع کا کہنا ہے کہ پاکستان سعودی عرب کو ایک ارب ڈالر ابھی ادا کرنے جا رہا ہے جبکہ ایک ارب ڈالر اگلے ماہ واپس کر دیا جائے گا۔  سعودی عرب کو اس قرض پر 3 فیصد سود بھی ادا کیا جائے گا۔

پاکستان نے سعودی عرب کا ایک ارب ڈالر کا قرض واپس کر دیا

شاہ محمود قریشی نے سعودی عرب کو قرض واپس کرنے کی وجہ بتا دی

سعودی عرب نے چین کے ساتھ 10 ارب ڈالر کی ریفائنری کا معاہدہ معطل کر دیا

یہ دوسری مرتبہ ہے کہ چین پاکستان کی مدد کے لیے سامنے آیا ہے، اس معاشی سال کے پہلے سہہ ماہی میں بھی پاکستان نے چین کی مدد سے سعودی عرب کو ایک ارب ڈالر کا قرض واپس کیا تھا۔

ایک اعلیٰ عہدیدار کا کہنا ہے کہ رقم جمع کرنا آئی ایم ایف پروگرام کا حصہ ہے اور قرض دینے والی اتھارٹی نے معاہدے کے وقت زبانی اور تحریری ضمانت لی تھی کہ پیکج کے دورانیے کے دوران معاہدے میں کسی بھی قسم کی تبدیلی کی جا سکتی ہے۔

پاکستان کے لیے آئی ایم ایف مشن چیف ارنسٹو ریمیریز رگو مالی ادائیگیوں کے معاہدے کے وقت توثیق کے لیے چین بھی گئے تھے۔

خیال رہے کہ سعودی عرب کی جانب سے اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے اکاؤنٹ میں 15 دسمبر 2018 کو تین سالہ مدت کے لیے رقم ڈالی گئی تھی اور پاکستان یہ رقم متعلقہ شیڈول سے پہلے واپس کر رہا ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
سعودی عرب کو 2 ارب ڈالر قرض کی واپسی، چین ایک بار پھر مدد کو آ گیا is highly popular post having 2 Twitter shares
Share with your friends
Powered by ESSB

Adblock Detected

We are working hard for keeping this site online and only showing these promotions to get some earning. Please turn off adBlocker to continue visiting this site