افریقی ملک سوازی لینڈ کے وزیراعظم کورونا وائرس کے ہاتھوں ہلاک

چار ہفتے قبل کورونا میں مبتلا ہونے والے سوازی لینڈ کے وزیراعظم امبروز ڈلامینی جان کی بازی ہار گئے۔

52 سالہ ڈلامینی 2018 سے ملک کے وزیراعظم تھے اور ایک ماہ قبل ان کا کورونا ٹیسٹ مثبت آیا تھا، جنوبی افریقہ کے ایک اسپتال میں ان کا علاج ہو رہا تھا۔

نائب وزیراعظم تھیمبا مسوکو نے ان کی موت کا اعلان کرتے ہوئے بتایا کہ اتوار کو دوپہر کے وقت انہوں نے آخری سانس لی۔

سوازی لینڈ کی حکومت نے وزیر اعظم کی موت کا اعلان سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر بھی کر دیا ہے۔

ڈلامینی پیشے کے لحاظ سے ایک بینکر تھے جنہوں نے 18 برس اس شعبے میں کام کیا تھا، بعد ازاں وہ سیاست میں آئے اور نومبر 2018 میں انہیں ملک کا وزیراعظم نامزد کیا گیا۔

سوازی لینڈ جنوبی افریقہ کے شمال مشرق میں واقع پہاڑی شاہی مملکت ہے۔ اس کی آبادی 12 لاکھ ہے اور ملک میں کرونا وائرس کے مصدقہ کیسوں کی تعداد 7 ہزار ہے جبکہ اب تک مہلک وائرس سے 127 اموات ہو چکی ہیں۔

رپورٹس کے مطابق جنوبی افریقہ میں کورونا کی دوسری لہر میں شدت اختیار کر رہی ہے، ملک کے صدر سیرل رامافوسا وبا کی نئی لہر کے پیش نظر قوم سے خطاب کریں گے۔

جنوبی افریقہ میں کورونا وائرس سے متاثرہ افراد کی مجموعی تعداد 8 لاکھ 60 ہزار 964 تک پہنچ گئی ہے۔

حکومت وائرس کے مرکز صوبے کیپ میں خلیج نیلسن منڈیلا کے علاقے میں پہلے ہی سخت پابندیاں عائد کر چکی ہے۔ شراب کی فروخت کا وقت مقرر کر دیا گیا ہے جب کہ علاقے میں رات بھر کرفیو نافذ رہے گا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

Adblock Detected

We are working hard for keeping this site online and only showing these promotions to get some earning. Please turn off adBlocker to continue visiting this site