موٹروے ٹال ٹیکس میں سینکڑوں گنا اضافہ کا انکشاف،2010ء میں لاہور اسلام آباد موٹروے پر کتنا ٹیکس تھا،سالانہ کتنا اضافہ ہوا؟ مکمل تفصیلات

اسلام آباد (عمران مگھرانہ) سینیٹ کی مواصلات کمیٹی کا اجلاس پارلیمنٹ ہاؤس میں ہوا۔ کمیٹی میں پیش کی گئی دستاویزات کے مطابق لاہور تا اسلام آباد موٹر وے ٹال ٹیکس میں ہوشربا اضافہ کا انکشاف ہوا ہے۔تفصیلات کے مطابق گزشتہ12برسوں میں لاہور تا اسلام آبادکاروں کے ٹال ٹیکس میں 730روپے کا اضافہ ہوا۔لاہور تا اسلام آبادموٹروے پر کاروں کا ٹال ٹیکس 180روپے سے بڑھ کر 910روپے تک جا پہنچا ہے۔لاہور تا اسلام آبادموٹروے پر بسوں کا ٹال ٹیکس 570روپے سے بڑھ کر 3040روپے تک جا پہنچا۔گزشتہ12برسوں میں لاہور تا اسلام آبادتک بسوں کے ٹال ٹیکس میں 2470روپے کا اضافہ ہوا۔دستاویزات کے مطابق سال2008-10تک لاہور تا اسلام آبادموٹروے پر کاروں کا ٹال ٹیکس 180روپے تھا، سال2010-11 میں ٹال ٹیکس 235روپے،سال2011-14تک 290روپے، سال2014-15 میں 440روپے،سال2015-16 میں 510روپے،سال2016-17 میں 580روپے، سال2017-18 میں 620روپے،سال2018-19 میں 680روپے،سال2019-20 میں 750روپے جبکہ سال2020-21 میں لاہور تا اسلام آبادموٹروے پر کاروں کا ٹال ٹیکس 830روپے تھا۔کمیٹی میں پیش کی گئی دستاویزات کے مطابق مالی سال2021-22 میں لاہور تا اسلام آبادموٹروے پر کاروں کا ٹال ٹیکس 910روپے ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button

Adblock Detected

We are working hard for keeping this site online and only showing these promotions to get some earning. Please turn off adBlocker to continue visiting this site