کوکا کولا سمیت 90 سے زائد کمپنیوں نے دنیا بھر میں سوشل میڈیا پر اشتہار روک دیے

کوکا کولا کمپنی نے اعلان کیا ہے کہ وہ دنیا بھر میں سوشل میڈیا پر کم از کم 30 دن کے لیے اپنے اشتہار بند کر رہی ہے۔

انہوں نے وضاحت کی کہ وہ دیگر کمپنیوں کے ساتھ مل کر بائیکاٹ میں شرکت نہیں کر رہے لیکن فی الحال وہ اپنے اشتہار روک رہے ہیں۔

کورونا وائرس کا علاج، سوشل میڈیا پر پھیلی افواہ نے 300 ایرانیوں کی جان لے لی

بھارت کی فیس بک سے لڑائی، پوری دنیا کاسوشل میڈیا متاثر ہونے کا امکان

اس ہفتے مختلف بڑی کمپنیوں پر مشتمل ایک گروپ نے جولائی کے دوران فیس پر اپنے اشتہار روکنے کا فیصلہ کیا تھا، اس میں یونی لیور، ویری زون، پنٹاگونیا، آر ای آئی سمیت 90 سے زائد کمپنیاں شامل ہو چکی ہیں اور فہرست میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے۔

‘سٹاپ ہیٹ فار پرافٹ’ کے ہیش ٹیگ کے ساتھ چلنے والی اس مہم کا مقصد فیس بک پر موجود نفرت انگیز مواد کے خلاف احتجاج ہے، اس میں نسل پرستی پر مبنی مواد خصوصاً نمایاں ہے۔

کوکا کولا کے سی ای اور اور چیئرمین جیمز کوئنسی کا کہنا ہے کہ دنیا میں نسل پرستی کے لیے کوئی جگہ نہیں ہے اور نہ ہی سوشل میڈیا پر اس کی جگہ ہونی چاہیئے۔

اپنے بیان میں انہوں نے  مزید کہا کہ ہم 30 دن سوشل میڈیا پر اشتہار روکیں گے اور اس دوران اپنی ایڈوائزانگ پالیسیوں کا ازسرنو جائزہ لیں گے، ہم اپنی سوشل میڈیا کی پارٹنر کمپنیوں سے بھی احتساب اور شفافیت کی توقع رکھتے ہیں۔

ٹویٹر اکاؤنٹ سے نازیبا ویڈیو لائیک ہونے پر وقار یونس کا سوشل میڈیا سے کنارہ کشی کا اعلان

صدر ٹرمپ نے سوشل میڈیا کمپنیوں کو بند کر دینے کی دھمکی کیوں دی؟

یونی لیور کمپنی نے بھی فیس بک، انسٹاگرام اور ٹویٹر پر 31 دسمبر تک اپنے اشتہارات روک دینے کا اعلان کیا ہے۔

ان تمام کمپنیوں کا مطالبہ ہے کہ سوشل میڈیا نیٹ ورکس نفرت انگیز مواد اور غلط معلومات کے خلاف اپنی پالیسیاں سخت کریں اور اس کے لیے واضح اقدامات کریں۔

ٹیگ

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

We are working hard for keeping this site online and only showing these promotions to get some earning. Please turn off adBlocker to continue visiting this site