برطانیہ میں کورونا کے اینٹی باڈی ٹیسٹ کا 20 منٹ میں نتیجہ دینے کا تجربہ کامیاب

گزشتہ ماہ برطانیہ میں کورونا کے اینٹی باڈی معلوم کرنے کا خفیہ تجربہ کیا گیا جس نے 98.6 فیصد درست نتائج دیے، کورونا کا کبھی بھی شکار ہونے والے افراد کی نشاندہی کے لیے یہ ٹیسٹ کیا جاتا ہے۔

انگلی پر سوئی چبھو کر کئے جانے والے اس تجربے میں صرف 20 منٹ میں نتائج سامنے آ گئے جو اب تک دنیا میں کورونا کے خلاف اسقدر سرعت سے قوت مدافعت معلوم کرنے کا پہلا تجربہ تھا۔

چین کے تیارکردہ انگلی پر سوئی چبھو کر کیے جانے ٹیسٹ کے بےفائدہ ثابت ہونے کے بعد برطانوی حکومت کی اجازت سے آکسفورڈ یونیورسٹی اور برطانیہ کی ٹیسٹ کرنے والی کمپنیوں نے مشترکہ تجربہ کیا جو کامیاب ثابت ہوا۔

 معروف جریدے ٹیلیگراف کی رپورٹ کے مطابق برطانیہ میں ریگولیٹری حکام کی منظوری سے قبل ہی ٹیسٹ کرنے والی ہزاروں کٹس تیار کر لی گئی ہیں، اگلے چند ہفتوں میں اجازت ملتے ہی ان کا استعمال شروع کر دیا جائے گا۔

حکومت کا منصوبہ ہے کہ عوام کو گھروں میں استعمال کے لیے دینے سے قبل یہ ٹیسٹ اسپتالوں کو فراہم کیا جائے، ماہرین اس کامیاب تجربے کو کورونا کے خلاف گیم چینجر قرار دے رہے ہیں۔

اس وقت کورونا کے اینٹی باڈی ٹیسٹ کے نتائج آنے میں کئی دن لگ جاتے ہیں اس لیے موجودہ تجربے کو بہت اہم قرار دیا جا رہا ہے۔

ٹیلیگراف نے ایک الگ رپورٹ میں بتایا ہے کہ کنگز کالج لندن کے سائنسدانوں نے مصنوعی ذہانت کا استعمال کرتے ہوئے ایک سافٹ وئیر تیار کیا ہے جس کے ذریعے کورونا وائرس کی 6 مختلف اقسام سامنے آئی ہیں۔

یہ سافٹ وئیر علامات کے کلسٹرز کو دریافت کر سکتا ہے، اس کے ذریعے ڈاکٹروں کے لیے زیادہ خطرے کے شکار مریضوں کی تلاش آسان ہو جاگے کی۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

Adblock Detected

We are working hard for keeping this site online and only showing these promotions to get some earning. Please turn off adBlocker to continue visiting this site