اسرائیل، یو اے ای معاہدہ

  • انتخابPhoto of یو اے ای، اسرائیل معاہدہ، اسرائیلی کمپنیاں دبئی کی ہیروں کی مارکیٹ میں قدم جمانے کو تیار

    یو اے ای، اسرائیل معاہدہ، اسرائیلی کمپنیاں دبئی کی ہیروں کی مارکیٹ میں قدم جمانے کو تیار

    ہیروں کا کاروبار کرنے والی معروف اسرائیلی کمپنی متحدہ عرب امارات میں بھی اپنے قدم جمانے کو تیار ہے۔ یو اے ای کے ساتھ سفارتی تعلقات کی بحالی کے بعد اسرائیل کی ہیرے فروخت کرنے والی زوی شمسی اپنی نئی شاخ دبئی میں قائم کرے گی۔ دبئی قیمتی پتھروں اور زیورات کی خریدوفروخت کا ایک اہم مرکز کہلاتا ہے۔ زوی شمسی ان 38 اسرائیلی کممپنیوں میں سے ایک ہے جنہوں نے دبئی میں کاروبار کا آغاز کیا ہے اور دنیا کو اشارہ دیا ہے کہ کیسے علاقائی سیاست عالمی تجارت پر اثرانداز ہو سکتی ہے۔ دبئی کے تاجروں کا کہنا ہے کہ وہ ان…

    مزید پڑھیں
  • انتخابPhoto of یو اے ای نے اسرائیل کا معاشی بائیکاٹ ختم کر دیا، 48 سال بعد فضائی رابطے قائم

    یو اے ای نے اسرائیل کا معاشی بائیکاٹ ختم کر دیا، 48 سال بعد فضائی رابطے قائم

    متحدہ عرب امارات کے حکمران نے اسرائیل کا معاشی بائیکاٹ ختم کرتے ہوئے اس کے ساتھ تجارتی اور مالی معاہدوں کی اجازت دے دی ہے۔ یو اے ای کی ریاست خبررساں ایجنسی ڈبلیو اے ایم نے کہا ہے کہ اسرائیل کا بائیکاٹ ختم کرنے کا فیصلہ شیخ خلیفہ بن زائد النیہان کے حکم پر کیا گیا ہے۔ ایجنسی کے مطابق اس حکم کے بعد اسرائیلی شہری اور فرمز کو یو اے ای میں کاروبار کی اجازت مل جائے گی، اسی طرح اسرائیلی سازوسامان کی خریدوفروخت بھی شروع ہو سکے گی۔ اسرائیلی کمپنی کی پہلی براہ راست فلائیٹ پیر کو اسرائیل کی سب سے بڑی…

    مزید پڑھیں
  • انتخابPhoto of ایف 35 طیاروں کا تنازعہ، یو اے ای نے اسرائیلی حکام سے ملاقات منسوخ کر دی

    ایف 35 طیاروں کا تنازعہ، یو اے ای نے اسرائیلی حکام سے ملاقات منسوخ کر دی

    اسرائیلی وزیراعظم نیتن یاہو کی طرف سے متحدہ عرب امارات کو ایف 35 جیٹ طیاروں کی فروخت کی مخالفت کے باعث یواے ای نے اسرائیلی اور امریکی حکام سے طے شدہ ملاقات منسوخ کر دی۔ عالمی میڈیا کے مطابق یہ ملاقات رواں ماہ کے اوائل میں طے ہوئی تھی اور اس کا مقصد اسرائیل، یو اے ای کے درمیان ہونے والے معاہدے پر رائے عامہ کو ہموار کرنا تھا۔ یو اے ای نے اسرائیل سے تعلقات قائم کرنے کے لیے ایف 35 طیاروں کی خریداری کی شرط عائد کی تھی، تاہم اسرائیلی فوج اور سیاسی اسٹیبلشمنٹ کی جانب سے اس کی سخت مخالفت کی…

    مزید پڑھیں
  • انتخابPhoto of مزید عرب ممالک جلد اسرائیل کے ساتھ تعلقات قائم کر لیں گے، وزیرخارجہ یو اے ای کا انکشاف

    مزید عرب ممالک جلد اسرائیل کے ساتھ تعلقات قائم کر لیں گے، وزیرخارجہ یو اے ای کا انکشاف

    متحدہ عرب امارات کے وزیر مملکت برائے خارجہ امور ڈاکٹر انور قرقاش نے انکشاف کیا ہے کہ دیگر عرب ممالک بھی اسرائیل کے ساتھ تعلقات بہتر بنانے کے رستے پر گامزن ہیں۔ اٹلانٹک کونسل کے ساتھ ویڈیو لنک کے ذریعے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اردن اور مصر کے برعکس ہم نے اسرائیل کے ساتھ کوئی جنگ نہیں لڑی اس لیے اسرائیل کے ساتھ ہمارے تعلقات ان کی نسبت زیادہ گرمجوشی پر مبنی ہوں گے۔ امریکہ کا سعودی عرب کو اسرائیل کے ساتھ تعلقات بہتر بنانے کا مشورہ اسرائیل اور متحدہ عرب امارات میں امن معاہدہ طے پا گیا، باہمی تعلقات قائم…

    مزید پڑھیں
  • انتخابPhoto of امریکہ کا سعودی عرب کو اسرائیل کے ساتھ تعلقات بہتر بنانے کا مشورہ

    امریکہ کا سعودی عرب کو اسرائیل کے ساتھ تعلقات بہتر بنانے کا مشورہ

    امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے داماد اور وائٹ ہاؤس میں سینئر مشیر جیرڈ کشنر نے کہا ہے کہ متحدہ عرب امارات کی طرح اسرائیل کے ساتھ اپنے تعلقات بہتر کرنا سعودی عرب کے مفاد میں ہے۔ رپورٹرز کو بریفنگ کے دوران انہوں نے کہا کہ اسرائیل کے ساتھ تعلقات بہتر بنانے سے خطے میں سعودی عرب کے مخالف ایران کا اثرورسوخ کم ہو گا جس سے آخرکار فلسطینیوں کی مدد ہو سکے گی۔ اسرائیل اور متحدہ عرب امارات میں امن معاہدہ طے پا گیا، باہمی تعلقات قائم کرنے پر اتفاق یو اے ای کے ساتھ سفارتی تعلقات معطل اور سفیر واپس بلایا سکتا ہے،…

    مزید پڑھیں
  • انتخابPhoto of یو اے ای کٹھ پتلی ہے، معاہدہ امت مسلمہ کا فیصلہ قرار نہیں دیا جا سکتا، فضل الرحمان

    یو اے ای کٹھ پتلی ہے، معاہدہ امت مسلمہ کا فیصلہ قرار نہیں دیا جا سکتا، فضل الرحمان

    جمیعت علمائے اسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے متحدہ عرب امارات کو طاقتور ممالک کی کٹھ پتلی قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ کمزور مسلم ممالک کی گردنیں مروڑ کر انہیں اسرائیل کے ساتھ معاہدے کا کہا جا رہا ہے۔ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ یو اے ای ایک چھوٹا سا جزیرہ ہے جو عالمی طور پر ان کے لیے کٹھ پتلی کی حیثیت رکھتا ہے، اس کا فیصلہ امت مسلمہ کا فیصلہ قرار نہیں دیا جا سکتا۔ ان کا کہنا تھا کہ مسلمان ممالک کو ابھر کر فیصلہ کرنا چاہیئے ورنہ یہ مزید آگے بڑھ سکتے ہیں،…

    مزید پڑھیں
  • انتخابPhoto of یو اے ای کے ساتھ سفارتی تعلقات معطل اور سفیر واپس بلایا سکتا ہے، طیب اردوان

    یو اے ای کے ساتھ سفارتی تعلقات معطل اور سفیر واپس بلایا سکتا ہے، طیب اردوان

    یو اے ای اور اسرائیل کے درمیان طے پانے والے معاہدے کے متعلق مختلف ممالک کا ردعمل سامنے آ رہا ہے، جہاں کچھ ممالک نے اسے پسندیدگی کی نظر سے دیکھا ہے وہیں ترکی اور ایران کا شدید ردعمل سامنے آیا ہے۔ ترکی کے صدر طیب اردوان نے کہا ہے کہ ان کا ملک یو اے ای کے ساتھ تعلقات معطل کر سکتا ہے جبکہ ایران نے معاہدے کو تزویراتی حماقت قرار دیا ہے۔ طیب اردوان نے رپورٹرز سے بات کرتے ہوئے کہا کہ میں نے وزیر خارجہ کو ایک حکم دیا ہے، ہم یو اے ای کے ساتھ سفارتی تعلقات معطل کر سکتے…

    مزید پڑھیں
  • انتخابPhoto of اسرائیل سے معاہدے پر ترکی کی یو اے ای پر شدید تنقید، منافقانہ رویہ قرار دے دیا

    اسرائیل سے معاہدے پر ترکی کی یو اے ای پر شدید تنقید، منافقانہ رویہ قرار دے دیا

    ترکی کا کہنا ہے کہ اسرائیل کے ساتھ معاہدہ کرنے پر تاریخ اور مشرق وسطیٰ کے لوگوں کا اجتماعی شعور متحدہ عرب امارات کے منافقانہ رویے کو نہ ہی بھولے گا اور نہ ہی معاف کرے گا۔ ترکی کی وزارت خارجہ نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ فلسطینی عوام اور ان کی انتظامیہ کا معاہدے کے خلاف شدید ردعمل درست ہے۔ بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ یو اے ای امریکہ کی مدد سے جن خفیہ عزائم پر عمل پیرا ہے، وہ ابھی ادھورے اور غیرحقیقی ہیں، اس میں فلسطینیوں کی قوت ارادی کو نظرانداز کیا گیا ہے۔ ترکی نے عرب امن…

    مزید پڑھیں
  • انتخابPhoto of یو اے ای سے معاہدے کے ایک روز بعد ہی اسرائیلی وزیراعظم اپنی زبان سے پھر گئے

    یو اے ای سے معاہدے کے ایک روز بعد ہی اسرائیلی وزیراعظم اپنی زبان سے پھر گئے

    اسرائیلی وزیراعظم نیتن یاہو نے متحدہ امارات کے ساتھ معاہدے کے اگلے روز ہی یوٹرن لیتے ہوئے مغربی کنارے کو اسرائیل میں ضم کرنے کا منصوبہ ختم نہ کرنے کا اعلان کر دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ متحدہ عرب امارات کے ساتھ ہونے والے معاہدے کے تحت مغربی کنارے کو اسرائیل کا حصہ بنانے کے منصوبے میں تاخیر تو ہو سکتی ہے مگر یہ اب بھی موجود ہے۔ ٹی وی خطاب میں نیتن یاہو نے کہا کہ انہوں نے اس منصوبے میں تاخیر پر رضامندی کا اظہار کیا تھا، ہم اپنی زمین اور حقوق کے معاملے پر کبھی پیچھے نہیں ہٹیں گے۔ انہوں…

    مزید پڑھیں
  • انتخابPhoto of اسرائیل اور متحدہ عرب امارات میں امن معاہدہ طے پا گیا، باہمی تعلقات قائم کرنے پر اتفاق

    اسرائیل اور متحدہ عرب امارات میں امن معاہدہ طے پا گیا، باہمی تعلقات قائم کرنے پر اتفاق

    امریکہ کی مدد سے اسرائیل اور متحدہ عرب امارات کے درمیان امن معاہدہ طے پا گیا ہے جس کے مطابق دونوں ممالک تعلقات معمول پر لانے پر متفق ہو گئے ہیں۔ فلسطینیوں نے اس معاہدے کو پیٹھ میں خنجر گھونپنے کے مترادف قرار دے دیا ہے۔ اس معاہدے کا اعلان امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کیا ہے، اسرائیل نے مغربی کنارے کی فلسطینی زمینوں کو اپنے ملک کا حصہ نہ بنانے پر اتفاق کیا ہے۔ اس معاہدے کے بعد یو اے ای پہلا خلیجی ملک اور مصر، اردن کے بعد تیسرا عربی ملک بن گیا ہے جس نے اسرائیل کے ساتھ تعلقات قائم کیے…

    مزید پڑھیں
Back to top button
Close

Adblock Detected

We are working hard for keeping this site online and only showing these promotions to get some earning. Please turn off adBlocker to continue visiting this site
اسرائیل، یو اے ای معاہدہ is highly popular post having 1 Twitter shares
Share with your friends
Powered by ESSB